31

جھنگ (محمد جاوید اعوان) چالان تو روز ہی کرتے ہو لیکن خدارا جھنگ کی ٹریفک کا نظام ہی درست کر دو معصوم ننھے منے بچے ٹریفک جام میں پھنسے رہتے ہیں ڈی ایس پی ٹریفک کے لئے شہر کی ٹریفک سنبھالنا چیلنج بن گیا

جھنگ (محمد جاوید اعوان) چالان تو روز ہی کرتے ہو لیکن خدارا جھنگ کی ٹریفک کا نظام ہی درست کر دو معصوم ننھے منے بچے ٹریفک جام میں پھنسے رہتے ہیں ڈی ایس پی ٹریفک کے لئے شہر کی ٹریفک سنبھالنا چیلنج بن گیا
تفصیلات کے مطابق شہریوں نے معصومانہ چہرہ بناتے ہوئے کہا کہ جھنگ میں یومیہ سینکڑوں چالان کئے جاتے ہیں لاکھوں روپے سرکار کے خزانے میں جمع بھی ہوتے ہونگے لیکن افسوس کی بات یہ ہے کہ آج تک جھنگ کی ٹریفک کا نظام درست نہ ہو سکا ہے ڈی ایس پی ٹریفک کی جانب سے چالان کرنے کا ہی شاید ٹاسک دیا جاتا ہے کیونکہ شہر کی تمام سڑکوں پر ٹریفک جام رہتی ہے سکول کالج کی چھٹی کے وقت تو سینکڑوں گاڑیاں رکشے سڑکوں پر دکھائی دیتے ہیں چاروں اطراف ٹریفک جام اور ایسے موقع پر ٹریفک پولیس کا نہ ہونا ایک سوالیہ نشان بن چکا ہے سکول سے چھٹی کے وقت خوشی سے نڈھال بچے گھر تک پہنچنے کے لئے گاڑیوں میں رکشوں میں سڑکوں پر خوار ہو جاتے ہیں جو کہ ڈی ایس پی ٹریفک کے لئے لمحہ فکریہ ہے عوامی سماجی حلقوں نے ڈی پی او جھنگ سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں