28

میونسپل کمیٹی کے چیف آفیسر کی نااہلی اور غفلت کی وجہ سے میونسپل سٹیڈیم میں کوڑا کرکٹ کے ڈھیر جمع کباڑ کا سامان کتوں اور گدھوں کا بسیرا* میونسپل کمیٹی کے گراؤنڈ کی حالت دیکھ کر رونا آتا ھے۔ شہری

*میونسپل کمیٹی کے چیف آفیسر کی نااہلی اور غفلت کی وجہ سے میونسپل سٹیڈیم میں کوڑا کرکٹ کے ڈھیر جمع کباڑ کا سامان کتوں اور گدھوں کا بسیرا*

میونسپل کمیٹی کے گراؤنڈ کی حالت دیکھ کر رونا آتا ھے۔ شہری

جھنگ (محمد جاوید اعوان)میونسپل کمیٹی کے چیف آفیسر شہزاد رانجھا کی غفلت کی وجہ سے میونسپل کمیٹی کے اپنے ہی گراونڈ میں کوڑا کرکٹ کے ڈھیر سے تعفن پھیلنے لگا پورے گراؤنڈ میں گندگی کے ڈھیر دیکھ کر شہری رونے لگے اس گراؤنڈ میں کبھی بڑے بڑے ٹورنامنٹ ہوا کرتے تھے گراونڈ کی چمک دھمک اور انتظامات دیکھنے کے لیے عوام کا رش لگتا تھا سپورٹس کھلاڑیوں کے علاوہ عام شہری بھی اس گراؤنڈ میں چہل قدمی کے لیے آتے تھے لیکن آج گراونڈ کی حالت یہ ہے کہ گراونڈ کی چار دیواری ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے مرکزی دروازوں پر زنگ لگے ہوئے ہیں اور میونسپل کمیٹی کی دوکانوں کے مالکان مرکزی گیٹ کے سامنے اپنا پرانا اور کباڑ کا سامان رکھتے ہیں جبکہ گراونڈ میں بھی کباڑ کا سامان رکھا جاتا ہے گراونڈ کے اندر اور باہر گدھے باندھ دئیے جاتے ہیں عوام گراؤنڈ کے اندر اور باہر پیشاب کرتے ہیں درخت اور پول گرے ہوئے ہیں گھاس کی کٹائی درختوں کی چھنائی کا کام بھی نہیں ہوتا ہے گراونڈ کے اندر نہ پینے کے لیے پانی اور نہ ہی بیٹھنے کے لئے صاف ستھری جگہ ہے کھلاڑیوں کے ساتھ عام شہری اس گراؤنڈ میں ورزش کرنے کے لیے آتے تھے لیکن آج شہری اس گراؤنڈ کے اندر داخل ہونے سے ڈرتے ہیں چیف آفیسر میونسپل کمیٹی کی نااہلی کی وجہ سے جہاں شہر بھر کی گلیوں سڑکوں میں کوڑا کرکٹ کے ڈھیر نظر آتے ہیں وہیں گراونڈ میں بھی انکی نااہلی دکھائی دیتی ہے عوامی حلقوں نے میونسپل گراونڈ میں صفائی ستھرائی پینے کے لیے پانی اور گراؤنڈ کی حالت پر اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں