35

جھنگ۔(محمد جاوید اعوان)ڈپٹی ڈائریکٹر لائیوسٹاک اٹھارہ ہزاری کےدفترمیں بغیرکسی آکشن کے سرسبزہرےبھرے درختوں کاقتل عام جاری۔قانون کےرکھوالےبیورو کریسی کےروپ میں ڈاکےڈالنےلگے۔ڈپٹی ڈائریکٹرسے جب اس بارے میں مؤقف پوچھا گیا تو وہ آئیں بائیں شائیں کرنےلگا

جھنگ۔(محمد جاوید اعوان)ڈپٹی ڈائریکٹر لائیوسٹاک اٹھارہ ہزاری کےدفترمیں بغیرکسی آکشن کے سرسبزہرےبھرے درختوں کاقتل عام جاری۔قانون کےرکھوالےبیورو کریسی کےروپ میں ڈاکےڈالنےلگے۔ڈپٹی ڈائریکٹرسے جب اس بارے میں مؤقف پوچھا گیا تو وہ آئیں بائیں شائیں کرنےلگا۔نہ تو وہ اس بارے میں کوئی اخباراشتہار منظرعام پر لا سکا اور نہ ہی سرسبز و تندرست درخت کٹوانےکی کسی متعلقہ اعلی اتھارٹی سےمنظوری دکھاسکا اور نہ ہی موصوف یہ بتا سکا کہ اسے ان درختوں کو نیلام کرنے کی کیا ضرورت پڑی ہے۔ (اندھیر نگری چوپٹ راجا)ذرائع کے مطابق یہ بھی معلوم ہواہےکہ ان سرسبزدرختوں کاقتل عام محض کرپشن اور لوٹ مار کی غرض سےکیاگیاہے۔اس جگہ کوئی ڈویلپمنٹ کاکام نہیں کیاگیا۔جب بار بار اس ہونے والے ظلم کے بارے میں دریافت کیا تو موصوف نے بالآخر سرسبزدرختوں کی کٹائی تسلیم کرکےسارا نزلہ محکمہ بلڈنگ کےاہلکاروں اور ٹھیکیدارپرڈال دیا۔عوامی و سماجی وشہری حلقوں نےڈائریکٹرانٹی کرپشن فیصل آباد۔ڈپٹی کمشنرجھنگ سمیت دیگراعلی حکام سےمطالبہ کیاہےکہ اس معاملہ کی انکوائری کرواکرذمہ داران کےخلاف باضابطہ قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں