71

جھنگ میں اتائی ڈاکٹر اور اتائی ہسپتال جیت گئے اور انتظامیہ ھار گئی اتائی ڈاکٹروں کو سیاسی آشیرباد حاصل ھونے کی وجہ سے انتظامیہ کارروائی کرنے سے گرایزں ھے۔ ذرائع

جھنگ میں اتائی ڈاکٹر اور اتائی ہسپتال جیت گئے اور انتظامیہ ھار گئی اتائی ڈاکٹروں کو سیاسی آشیرباد حاصل ھونے کی وجہ سے انتظامیہ کارروائی کرنے سے گرایزں ھے۔ ذرائع
جھنگ(جاوید اعوان سے) ضلع بھر میں اتائی ڈاکٹر اور اتائی ہسپتال جیت گئے اور انتظامیہ ھار گئی اتائی ڈاکٹروں کو سیاسی آشیرباد حاصل ھونے اور چمک کی وجہ سے انتظامیہ کارروائی کرنے سے گرایزں ھے ذرائع کے مطابق جھنگ کی تمام تحصیلوں اور اسکے گردونواح میں سیاسی آشیرباد سے اتائی ڈاکٹروں نے پنجھے گاڑ لیے ہیں اور عوام کی جان اور صحت سے کھلے عام کھیل رھے ہیں ذرائع کے مطابق بہت سے ہسپتالوں میں اتائی ڈاکٹر خود علاج معالجہ کرتے ہیں مگر ہسپتال کے سامنے کسی نہ کسی ایم بی بی ایس ڈاکٹر کا بورڈ آویزاں کیا ھوتا ھے جب کوئی انتظامیہ کا آفیسر یہاں کا وزٹ کرتا ھے تو انکو ہسپتال کے باہر لگا بورڈ دکھا دیا جاتا ھے اور اگر بات نہ بنے تو اس ڈاکٹر سے موبائل فون پر بات کروا دی جاتی ھے ایک مقامی شہری نے نام شائع نہ کرنے کی شرط پر بتایا ھے کہ شور کوٹ ملتان روڈ پر اڈا کوٹھی حسن میڈیکل کمپلیکس جسکو ڈاکٹر احمد حسن تھگہ چلا رھے ہیں اور مچھر چوک میں حسنین ہسپتال جسکو ڈاکٹر رشید چلا رھے ہیں اور قائم بھروانہ میں شارام ہسپتال جبکہ ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ بہت سے ایسے ہسپتال تحصیل احمد پور سیال اور اٹھارہ ہزاری میں بھی عوام کی جانوں سے کھیل رھے ہیں اور عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رھے ہیں جن میں حمزہ میٹرنٹی ہسپتال حق باھو کالونی باڑ روڈ کوٹ بہادر جو کہ ڈاکٹر حمزہ کی زیرنگرانی چل رھا ھے دعا فاطمہ زچہ بچہ سنٹر جنڈ وادی کالونی گڑھ موڑ جس کو ڈاکٹر عبدالرشید چلا رھا ھے۔ ایم بی ہسپتال ڈانیہ موڑ ڈاکٹر مظہر چلا رھا ھے۔ حاجراں کلینک نور شاہ بستی ڈاکٹر جمیل چلا رھا ھے اور شاکر ہسپتال اٹھارہ ہزاری ڈاکٹر آصف شاکر چلا رھا ھے اور فخر ہسپتال احمد پور سیال ڈاکٹر فخر جوگی کی زیرنگرانی چل رھا ھے اور وریام ہسپتال گیارہ چک گھیل پور ڈاکٹر طالب چلا رھا ھے اور یہ سب اتائی ڈاکٹر اور اتائی ہسپتال عوام کی جانوں سے کھلواڑ کر رھے ہیں عوامی اور سماجی حلقوں نے چیف سیکریٹری پنجاب صوبائی سیکرٹری صحت پنجاب کمشنر فیصل آباد ڈویژن فیصل آباد اور محمد ارشد بھٹی ڈپٹی کمشنر جھنگ اور اسسٹنٹ کمشنر شور کوٹ اور ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر ہیلتھ اتھارٹی شور کوٹ سے اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ھے ہیلتھ کیئر کمیشن اوریجنل ہسپتالوں اور مستند ڈاکٹرز کے تو پیچھے ھاتھ دھو کر پڑا ھوا ھے مگر اتائی ہسپتال اور اتائی ڈاکٹر تو شاید اس کو نظر بھی نہیں آتے ہیں عوامی اور سماجی حلقوں نے ہیلتھ کیئر کمیشن سے بھی اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں