27

جھنگ(جاوید اعوان سے) تحصیل شور کوٹ میں یوریا کھاد کا پیدا کردہ مصنوعی بحران ڈپٹی کمشنر کے کنٹرول سے مکمل باہر ۔ تحصیل بھر میں یوریا کھاد کنٹرول ریٹ پر ملنا خواب بن گیا

جھنگ(جاوید اعوان سے) تحصیل شور کوٹ میں یوریا کھاد کا پیدا کردہ مصنوعی بحران ڈپٹی کمشنر کے کنٹرول سے مکمل باہر ۔ تحصیل بھر میں یوریا کھاد کنٹرول ریٹ پر ملنا خواب بن گیا ۔ ناجائز منافع خوروں کی جانب سے 2900 روپے فی بیگ سے 3300 روپے تک فی بیگ یوریا کھاد فروخت کی جارہی ھے ۔ ذرائع کا کہنا ھے کہ یوریا کھاد کا کنٹرول ریٹ فی بیگ 2250 روپے مقرر کیا گیا ھے ۔ میڈیا سروے کے دوران شور کوٹ سٹی شور کوٹ کینٹ کے علاؤہ وریام والا باٹیاں والا قائم بھروانہ سمیت دیگر مختلف علاقوں میں یوریا کھاد کی بلیک میں فروخت کا سلسلہ عروج پر پہنچ چکا ھے ۔ ناجائز منافع خوروں کے ہاتھوں لٹتے شہریوں کی چیخ و پکار سننے والا بھی کوئی نہیں ھے ۔ اس بارے عابد شاہ اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت توسیع سے موقف لینے پر انہوں نے کہا کہ یوریا کھاد واقعی نہ ہونے کے برابر ھے ۔ انہوں نے واضح کیا کہ تحصیل بھر میں شور کوٹ کے علاقے ککی نو میں کنٹرول ریٹ پر یوریا کھاد کسانوں کو میسر کی جا رہی ھے ۔ باقی شور کوٹ تحصیل ہیڈ کوارٹر سمیت دیگر کسی علاقے میں یوریا کھاد کا کنٹرول ریٹ پر ملنا بہت مشکل ھے ۔ ایک طرف یوریا کھاد کے پیدا کردہ مصنوعی بحران کے طبل سنائی دے رہے ہیں تو دوسری طرف میڈیا سروے کے دوران شور کوٹ سٹی ۔ کینٹ ۔ وریام والا ۔ باٹیاں والا ۔ قائم بھروانہ سمیت دیگر علاقوں میں یوریا کھاد کی بلیک میں ناجائز منافع خوروں کی جانب سے منہ مانگے ریٹس پر فروخت کا سلسلہ عروج پر پہنچ چکا ھے ۔ جس پر عوامی وسماجی شہری وکلاء تنظیموں نے ارشد بھٹی ڈپٹی کمشنر جھنگ سمیت دیگر اعلیٰ حکام سے فوری نوٹس لینے کا پرزور مطالبہ کیا ھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں