31

سٹی ون نیوز کی نشاندھی پر CEO ہیلتھ اتھارٹی کا ایکشن ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کی غیر قانونی DDO پاورز واپس نوٹیفکیشن جاری

سٹی ون نیوز کی نشاندھی پر CEO ہیلتھ اتھارٹی کا ایکشن ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کی غیر قانونی DDO پاورز واپس نوٹیفکیشن جاری
جھنگ(محمد جاوید اعوان) سٹی ون نیوز کی نشاندھی پر CEO ہیلتھ اتھارٹی کا ایکشن ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کی غیر قانونی DDO پاورز واپس نوٹیفکیشن جاری تفصیلات کے مطابق سابق سی ای او ڈاکٹر سہیل اصغر قاضی نے نہ جانے کیوں غیر قانونی طور پر DDO پاورز ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کو دے دی تھیں جس کی بنا پر ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام نے بے پر کی اڑائیں اور بے شمار قانونی اور غیر قانونی پیمنٹس کی۔ شہری نے رائٹ ٹو انفارمیشن قانون کے مطابق چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیلتھ اتھارٹی جھنگ سے ان DDO پاورز کے بارے اور ان DDO پاورز کے تحت کی گئی پیمنٹس کی تفصیلات کا ریکارڈ مانگا تو سی ای او ہیلتھ اتھارٹی آفس نے وہ لیٹر ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کو مارک کر دیا اور کہا کہ آپ انکے دفتر سے یہ ریکارڈ لے لیں۔ جب ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کے دفتر رابطہ کیا تو انھوں نے موقف اختیار کیا کہ ھم تو چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیلتھ اتھارٹی کے ماتحت ھی نہیں ہیں اور نہ ھی ھم انکے حکم کے مطابق کوئی ریکارڈ دینے کے پابند ہیں جب یہ ساری تفصیلات میڈیا پر ھائی لائیٹ ھوئیں تو موجودہ چیف ایگزیکٹو آفیسر ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر منظور حسین نے اپنی جان بچانے کے لیے سابقہ سی ای او ہیلتھ اتھارٹی ڈاکٹر سہیل اصغر قاضی کی ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر IRMNCH اینڈ نیوٹریشن پروگرام کو دی ھوئی DDO پاورز واپس لے کر ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر کو دینے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا
عوامی اور سماجی حلقوں نے وزیر اعلی پنجاب میاں محمد حمزہ شہباز شریف صوبائی وزیر صحت اور سیکریٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ پنجاب کمشنر فیصل آباد اور احمد کمال مان ڈپٹی کمشنر جھنگ کو اپیل کی ھے کہ یہ غیر قانونی DDO پاورز دینے والے سابق سی ای او ہیلتھ جھنگ ڈاکٹر سہیل اصغر قاضی اور ان غیر قانونی DDO پاورز کے ذریعے لاکھوں روپے کی پیمنٹس کرنے والی ڈاکٹر عنبرین ڈسٹرکٹ کوآرڈینیٹر( IRMNCH ) اینڈ نیوٹریشن پروگرام اور ان غیر قانونی پیمنٹس میں ملوث اہلکاروں کے خلاف اعلیٰ سطحی انکوائری کروائی جائے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں