31

شور کوٹ ڈاکٹر ماریہ امداد DMS تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال کے غیر قانونی میڈیکو لیگل کے باعث 6/7 لوگ حوالات کی ھوا کھا رھے ہیں۔ ذرائع مزید تفصیلات کے لیے لنک پر کلک کریں

شور کوٹ ڈاکٹر ماریہ امداد DMS تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال کے غیر قانونی میڈیکو لیگل کے باعث 6/7 لوگ حوالات کی ھوا کھا رھے ہیں۔ ذرائع مزید تفصیلات کے لیے لنک پر کلک کریں
جھنگ(محمد جاوید اعوان) ڈاکٹر ماریہ امداد DMS تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال شور کوٹ کے غیر قانونی میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ کے باعث 6/7 لوگ ناجائز ھی حوالات کی ھوا کھا رھے ہیں واضح رھے کہ ڈاکٹر ماریہ امداد DMS تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال شور کوٹ نے غیر قانونی طور پر چھٹی والے دن جب کہ موصوفہ کی ڈیوٹی بھی نہ تھی میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ جاری کیا جس کی بنا پر تھانہ شور کوٹ کینٹ نے مقدمہ درج کر کے ملزمان کو گرفتار کر لیا جبکہ ذرائع بتا رھے کہ یہ میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ غیر قانونی اور جعلی ھے ڈاکٹر صاحبہ نے مریضوں کی غیر حاضری میں ھی میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ جاری کیا ھے میڈیا ٹیم کی نشاندھی پر ایم ایس تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال شور کوٹ ڈاکٹر نوید صفدر نے بھی اس بات کی تصدیق کر دی ھے کہ جاری شدہ میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ غیر قانونی ھے کیونکہ جس دن اور جس وقت یہ میڈیکو لیگل سرٹیفکیٹ جاری کیا گیا ھے اس دن اور اس وقت ڈاکٹر ماریہ امداد کی ڈیوٹی ھی نہ تھی مزید برآں ایم ایس تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال ڈاکٹر نوید صفدر نے موصوفہ کی جواب طلبی بھی کر لیں ھے اور میڈیا ٹیم نے جواب طلبی کا خط بھی وصول کر لیا ھے جب میڈیا ٹیم نے ڈاکٹر ماریہ امداد DMS تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال شور کوٹ سے موقف کے لیے رابطہ کیا تو انھوں نے بتایا کہ میں نے کوئی غیر قانونی کام نہیں کیا ھے سب کچھ قانون کے دائرے میں رہ کر کیا ھے مجھے خواہ مخواہ بلیک میل کیا جا رھا ھے ۔ حوالات میں بند ملزمان کے لواحقین اور
عوامی اور سماجی حلقوں نے وزیر اعلی پنجاب میاں محمد حمزہ شہباز شریف صوبائی وزیر صحت سیکریٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کمشنر فیصل آباد ڈویژن اور احمد کمال مان ڈپٹی کمشنر جھنگ سے اعلیٰ سطحی انکوائری کی اپیل کی ھے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں