25

عبدالحکیم (عبدالروف عاقب) یرقان کا مرض عالمی سطح پر ایک وباء کی صورت اختیار کرتا جا رہا ھے، مزید تفصیلات کے لیے لنک پر کلک کریں

عبدالحکیم (عبدالروف عاقب) یرقان کا مرض عالمی سطح پر ایک وباء کی صورت اختیار کرتا جا رہا ھے، مزید تفصیلات کے لیے لنک پر کلک کریں
28جولائی ہیپاٹائٹس کے عالمی دن کے حوالے سے وڑائچ ہسپتال عبدالحکیم میں ایک سیمینار منعقد ہوا جس میں مقررین نے اس موذی مرض کی شدت، اسباب اور بچاؤ پر ماہرانہ گفتگو کی۔ سابق رجسٹرار نشتر ہسپتال ملتان ڈاکٹر اسلم حیات وڑائچ جو تقریب ہٰذا کی صدارت بھی کر رہے تھے نے انکشاف کیا کہ ہیپاٹائٹس بی اور سی کا براہِ راست حملہ انسانی جگر پر ہوتا ہے اوراس مرض کا تاخیر سے علم ہونے پرجگر سکڑنے یا سخت ہوجانے کا عارضہ لاحق ہو جاتا ہے جس کی پہلی دو سٹیج (یعنی ایف1اورایف2) تو قابلِ علاج ہیں لیکن اس کے بعد جگر کا ٹرانسپلانٹ اور جگر کا کینسر انسانی جان کے ضیائع پر منتنج ہوتا ہے۔ انہوں نے متنبہ کیا کہ انجکشن لگوانے کیلئے کسی ماہر معالج و کلینک کا انتخاب کریں وگرنہ بہتر یہی ہے کہ دوران بیماری کھانے پینے والی ادویات ہی استعمال کرلیں۔ اس موقع پر ایک اور ماہر ڈاکٹر عمر امیر حیدر نے بتایا کہ میاں بیوی سے ایک دوسرے کو یرقان کا امکان کم ہوتا ہے تاہم تین انجکشن پر مشتمل احتیاطی کورس کروایا جا سکتا ہے۔ انکا کہنا تھا کہ استعمال شدہ ٹیکہ جات اور آلاتِ جراہی کو ختم کرنے کیلئے ہسپتال (Incinerator) مشین استعمال کرتے ہیں جو ان کو جلا دیتی ہے۔ سیمینار میں لیڈی ڈاکٹر خدیجہ عمر، ڈاکٹر محمد عرفان، ڈاکٹر محمد معاویہ، ڈاکٹر علی اور شہر کے سماجی و تعلیمی طبقہ ء فکرکے افراد انجنیئرفاروق ستار ملک، امجد علی امجد ایڈووکیٹ، عبدالروف عاقب (جرنلسٹ ٹرینر)، سید عتیق مہتاب، خالد حسین میؤ نے بھی شرکت کی اورہیپاٹائٹس سے بچاؤ بارے احتیاطی تدابیر اختیار کرنے بارے بات چیت کی۔ بعد ازاں ہسپتال ھذا کے اندر علامتی واک کے ذریعہ اس دن کی اہمیت کو اجاگر کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں