30

جھنگ ( جاوید اعوان سے) جھنگ میں افسران کے لیے دفاتر مقبوضہ علاقہ بن گئے ہیں افسران دفاتر سے غائب لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا سینکڑوں کلومیٹر کا سفر کر کے آنے والے مایوس واپس لوٹنے لگے اگر افسر دفتر میں مل ہی جائے تو میٹنگ کے نام پر عوام ملاقات نہیں کر سکتی

جھنگ ( جاوید اعوان سے) جھنگ میں افسران کے لیے دفاتر مقبوضہ علاقہ بن گئے ہیں افسران دفاتر سے غائب لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا سینکڑوں کلومیٹر کا سفر کر کے آنے والے مایوس واپس لوٹنے لگے اگر افسر دفتر میں مل ہی جائے تو میٹنگ کے نام پر عوام ملاقات نہیں کر سکتی خاص کر انتظامی افسران۔جن سے ڈائریکٹ سائلین۔کا ملنا ضروری ہے وہ دفتر آنا گوارہ نہیں کرتے جن فائلوں سے فائدہ ہو وہ اہلکاروں کے ذریعے۔گھر پر منگوا کر کرتے ہیں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل دفتر آنا اپنی توہین سمجھنے لگے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل احمد رضا جو ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر فنانس ہیں۔اور ان کے پاس اے ڈی سی جی کا چارج ہے چونکہ فنانس میں بہت پیسہ ہے اور ان کی توجہ زیادہ فنانس پر ہوتی ہے اے ڈی سی جی کے دفتر کم ھی آتے ہیں جن فائلوں سے فائدہ ہوتا ہے وہ فائلیں گھر ہی منگوا لیتے ہیں لوگ احمد پور سیال بلو کوٹ شاکر مسن پیرکوٹ سدھانہ شاہ جیونہ لانگ شمالی جیسے دور دراز علاقوں سے آتے ہیں اور مایوس واپس لوٹ جاتے ہیں لیکن اے ڈی سی جی کی تمام تر توجہ فنانس پر ھے اور فنانس میں پرکشش مراعات ہیں رنگ برنگے ٹھیکیدار آتے ہیں اسی طرح ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو جو بلدیہ کے ایڈمینسٹریٹر بھی ہیں اور وہ بھی سابقہ اے ڈی سی آر کی۔روایات کو برقرار رکھتے ہوئے گھر ہر ہی فائدے والی فائلیں سائن کرتے ہیں۔چند خاص وکلا جو گھروں میں ملتے ہیں جبکہ سابقہ کے بھی ایک وکیل صاحب خاص تھے وہی سب ڈیل کرتے تھے چلو سابقہ کام کسی کا نہیں کرتے تھے لیکن باتیں سنا کر تو خوش رکھتے تھے فائدے والے فائلیں پہلے بھی گھروں میں منگوائی جاتی تھی اب بھی وہی روٹین ہے جبکہ ریونیو ورک پر کوئی توجہ نہیں جبکہ موجودہ اے ڈی سی آر مزمل الیاس کو ریونیو معاملات کا کوئی تجربہ نہ ہیں وہ سیاسی سفارش پر لگ تو گئے مگر عوام بہت پریشان ہے اور دفتر اگر آتے ہیں تو گیارہ بارہ بجے جبکہ وہ اے ڈی سی آر کے ساتھ ایڈمینسٹریٹر میونسپل کمیٹی جھنگ بھی ہیں اور شہر گندگی اور گندے پانی کا ڈھیر بن چکا ہے تجاوزات نے شہریوں کا جینا حرام کر رکھا ہے مگر اے ڈی سے آر ٹس سے مس نہیں ہورہے جھنگ کے شہریوں کو افسران کی عدم۔دستیابی پر سخت مشکلات کا سامنا ہے شہریوں نے چیف سیکرٹری پنجاب کمشنر فیصل آباد اور ڈپٹی کمشنر جھنگ سے مطالبہ کیا کہ اپنے افسران کی حاضری دفاتر میں یقینی بنائیں اور میرٹ پر مسائل حل کرنے کے احکامات صادر فرمائیں اور فائلوں کو گھر پر منگوانے کی۔بجائے دفاتر میں میرٹ پر فیصلے کیے جائیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں