40

جھنگ(محمد جاوید اعوان)ملک میں غذائی استحکام اور گندم کی خود کفالت کے لیے محکمہ زراعت (توسیع) حکومت پنجاب اور زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے توسیعی کارکنان، آفیسران اور نوجوانوں کا ہراول دستہ جھنگ اور گرد نواح میں کسانوں کے ساتھ گندم کی کاشت کے لیے کھیت کھیت کھلیان کھلیان مصروف عمل ھے

جھنگ(محمد جاوید اعوان)ملک میں غذائی استحکام اور گندم کی خود کفالت کے لیے محکمہ زراعت (توسیع) حکومت پنجاب اور زرعی یونیورسٹی فیصل آباد کے توسیعی کارکنان، آفیسران اور نوجوانوں کا ہراول دستہ جھنگ اور گرد نواح میں کسانوں کے ساتھ گندم کی کاشت کے لیے کھیت کھیت کھلیان کھلیان مصروف عمل ھے ۔اس سلسلے میں ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت (توسیع) جھنگ چو ہدری اختر ح±سین اور پرنسپل آفیسر تعلقات عامہ زرعی یونیورسٹی فیصل آبادپروفیسر ڈاکٹر جلال عارف کی قیادت میں طلبا اور طالبات کی بڑی تعداد نے جھنگ شہر میں روڈ شو کا مظاہرہ کیا روڈ شو سے خطاب کرتے ہوئے۔ پروفیسر ڈاکٹر جلال عارف نے کہا کہ 1960ءمیں جس طرح کسانوں کے ساتھ زرعی اداروں نے ملکر زرعی انقلاب برپا کیا تھا اسی طرح موجودہ حکومت کی جانب سے شروع کی جانیوالے گندم اگاو¿ مہم ملکی تاریخ میں ریکارڈ پیداوار حوالے سے سنگ میل ثابت ہوگی۔ پنجاب بھر میں 3 من فی ایکڑ پیداوار میں اضافے کے لیے پہلی بار محکمہ زراعت (توسیع) اور زرعی یونیورسٹی مل کر(گندم ا±گاو¿ مہم)چلا رہے ہیں۔جس کا مقصد محنتی کسان کے ساتھ مربوط رابطہ اور ا±سے جدید پیداواری رحجانات کے مطابق بوائی کے مراحل میں مدد فراہم کرنا ہے۔تاکہ گندم کی پیداوار میں اضافے کے ساتھ ساتھ ملک کو غذائی خود کفالت کی منزل سے ہمکنار کرایا جا سکے۔ا±نھوں نے کہا وزیرزراعت پنجاب سید ح±سین جہانیاں گردیزی، سیکرٹری زراعت اسدر حمن گیلانی، ڈائریکٹر جنرل زراعت(توسیع) پنجاب ڈاکٹر انجم علی بٹر اور یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اقرار احمدخاں اس 9 روزہ مہم کو کامیاب بنانے کے لئے جنگی بنیادوں پر پیش رفت یقینی بنانے میں مصروف عمل جس کے نتیجے میں اس سال گندم کی ریکارڈ پیداوار کا حصول ممکن بنایا جائیگا۔ ڈپٹی ڈائریکٹر، چوہدری اختر حسین نے کہا کہ اس 9 روزہ مہم کے لئے یونیورسٹی کے 250 طلبا و طالبات مرکز لیول پر زرعی توسیعی عملہ کے ساتھ ملکر دن بھر کسانوں کے ساتھ مصروف عمل رہیں گے اس سلسلہ میں روڈ شوز کے ساتھ ساتھ گندم کی جدید ٹیکنالوجی کے حوالے سے تیار کردہ تشہیری مواد گھر گھر تقسیم کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو گروہوں کی صورت میں ضلع جھنگ کے طول و ارض میں پھیلا دیا گیا ہے،جہاں زمین کی تیاری، تصدیق شدہ بیجوں کوزہر کاری کے ساتھ ساتھ بوائی کے لئے زرعی مشینری کے موئثر استعمال کے حوالے شعور کی بیداری کے لئے کام مکمل کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس عمل سے نہ صرف نوجوان طلبہ کو کسانوں کے عملی اقدامات سے ہم آہنگ ہونے کا موقع میسر آسکے گا بلکہ کلاس روم اور لیبارٹریز سے نکل کر زمینی حقائق کا ادراک بھی حاصل ہو گا۔اسسٹنٹ ڈائریکٹر زراعت(توسیع) محمد گلزار شاہدنے کہا کہ قوم کے بیٹے بیٹیاں اپنے اساتذہ کے ہمراہ وطن کی مٹی سے محبت کا قرض چکانے کے لئے جس طرح فیلڈ میں نکلے ہیں اس کے انتہائی مثبت نتائج برآمد ہوں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں