21

جھنگ۔شہربھرمیں مہنگائی کےجن بےقابو۔اشیائےخوردونوش دن بدن غریب عوام کی پہنچ سےدور۔آئےروزپرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی میٹنگزسستی شہرت حاصل کرنےکیلیےفوٹوسیشن و بندکمروں میں ٹی اے ڈی اے کی مدمیں دہاڑیاں بنانے تک محدود۔اعلی حکام نوٹس لیں۔لٹتےشہریوں کی دہائیاں۔

جھنگ۔شہربھرمیں مہنگائی کےجن بےقابو۔اشیائےخوردونوش دن بدن غریب عوام کی پہنچ سےدور۔آئےروزپرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی میٹنگزسستی شہرت حاصل کرنےکیلیےفوٹوسیشن و بندکمروں میں ٹی اے ڈی اے کی مدمیں دہاڑیاں بنانے تک محدود۔اعلی حکام نوٹس لیں۔لٹتےشہریوں کی دہائیاں۔
جھنگ(محمد جاوید اعوان)شہربھرکےعلاوہ گرد ونواح میں قمرتوڑ مہنگائی نےغریب اور متوسط طبقہ شہریوں کاجیناحرام کردیاہے۔میڈیاسروےکےدوران شہریوں کاکہناتھاکہ خودساختہ مہنگائی نےشہریوں کاجیناحرام کررکھاہے اورحکومت کی طرف سےجاری کردہ دکھاوے کی فرضی ریٹ لسٹیں صرف 20روپےفی فوٹوکاپی کےحساب سےچندہ وصول کرنےتک محدودہوچکاہے۔جبکہ ضلعی حکومت کی جاری کردہ ریٹ لسٹوں پرعملدرآمدکروانےمیں درجنوں بھرپرائس کنٹرول مجسٹریٹس ناصرف بری طرح ناکام ہوچکےہیں۔بلکہ روزانہ کی بنیادپربندکمروں میں بیٹھ کراپنی جیبیں گرم کرنےکی کہانیاں تیارکرتےہیں۔روزانہ ٹی اے۔ڈی اےکےعلاوہ گاڑیوں کےتیل۔مرمت کےفج بل نکلواکرلاکھوں روپےماہانہ کےحساب سےڈکارمارجانےکا انکشاف ہواہے۔میڈیاسروےکےدوران شہریوں کاکہناتھاکہ ضلعی افسران کی ناک کےنیچےضلع کچہری وشہربھرکےعلاوہ دیہاتی علاقوں میں کریانہ سٹوروں۔سبزی وپھل فروشوں۔چکن۔بیف۔مٹن۔کےعلاوہ علی باباسموسہ شاپ۔جگرہوٹل۔گیلانی ہوٹل۔ابراہیم ہوٹل۔کیمزہوٹل۔سمیت شہربھرکےعلاوہ چھوٹےبڑےہوٹلوں پرشہریوں کی جیبوں پرڈاکےڈالنےکاسلسلہ مکمل عروج پکڑچکاہے۔میڈیاسروےکےدوران شہریوں کاکہناتھاکہ ہوٹلوں میں غیرمعیاری کھانےتیارکیےجاتےہیں اورصفائی کےناقص انتظامات کےباعث شہری مختلف موذی امراض میں مبتلاہورہےہیں۔محکمہ فوڈکےافسران لمبی تان کرخرگوش کی نیندکےمزےلےرہےہیں۔شہریوں نےمزیدکہاکہ خودساختہ مہنگائی سےناصرف شہریوں کاجیناحرام ہوچکاہے۔بلکہ پی ٹی آئی حکومت کی بدنامی وناکامی کاموؤجب بنتاجارہاہے۔اورخودساختہ مہنگائی کوکنٹرول نہ کرنےکےباعث شہریوں میں حکومت وقت سےنفرت پیداکی جارہی ہے۔جس پر عوامی سماجی حلقوں نےعثمان بزدار وزیراعلی پنجاب۔چیف سیکرٹری پنجاب۔ڈپٹی کمشنرجھنگ سمیت دیگراعلی حکام سےفوری طورپرنوٹس لینےکاپرزورمطالبہ کیاہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں