28

اٹھارہ ہزاری(جاوید اعوان سے)چکن کی قیمتوں کو پر لگ گئے چکن کی قیمت میں ھوشر با اضافے نے عوام کو دن میں تارے دکھا دیئے پانچ روز میں 63 روپے اضافہ ہوگیا.قیمت 520 روپے فی کلو تک جا پہنچی. مرغی کا گوشت غریب کی قوت خرید سے باہر ہو گیا وزیر اعلیٰ پنجاب نوٹس لیں شہری

اٹھارہ ہزاری(جاوید اعوان سے)چکن کی قیمتوں کو پر لگ گئے چکن کی قیمت میں ھوشر با اضافے نے عوام کو دن میں تارے دکھا دیئے پانچ روز میں 63 روپے اضافہ ہوگیا.قیمت 520 روپے فی کلو تک جا پہنچی. مرغی کا گوشت غریب کی قوت خرید سے باہر ہو گیا وزیر اعلیٰ پنجاب نوٹس لیں شہری۔ تفصیلات کے مطابق ملک بھر کی طرح اٹھارہ ہزاری میں بھی چکن کی قیمتیں آسمان کی بلندیوں کو چھونے لگیں بیف اور مٹن کے بعد اب چکن بھی غریب اور متوسطہ طبقے کی پہنچ سے دور ہوچکا ہے چکن کی قیمت پانچ روز میں 457 سے 520 روپے فی کلو تک جا پہنچی ہے جس کے باعث گوشت کھانا غریب آدمی کیلئے ایک خواب بن چکا ہے مہنگائی کے سونامی نے غریب سے دو وقت کی روٹی چھین لی ہے اشیاء خوردونوش کے ساتھ ساتھ روز بروز بڑھتی ہوئی چکن کی قیمتوں نے عوام کو ذہنی کوفت میں مبتلا کر دیا ہے شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت نے عوام کو مہنگائی کی چکی میں پیس کر رکھ دیا ہے عوامی سماجی حلقوں نے وزیر اعظم پاکستان اور وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیا ہے کہ چکن مافیا کو نکیل ڈال کر چکن کی قیمت کو کنٹرول کیا جائے اور مرغی کے گوشت کو عوامی دسترس میں لایا جائے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں